تلاش
دقیق تر تلاش
English | فارسی | Urdu | Az | العربی
صفحه اصلی > مدارس > مدرسه عالی فقه و اصول  

مدرسہ عالی فقہ و اصول
مجتمع آموزش عالی فقہ کے چہار مدارس میںسےایک مدرسہ فقہ واصول ہے جسمیں فقہ و اصول کی اعلی تعلیم سطح ٣،٤،٥ اور ڈاکٹریٹ ان تین مضمونوں میں (فقہ و اصول و رجال) میں دی جاتی ہے۔
یہ مدرسہ مجتمع کی مرکزی عمارت مدرسہ حجتیہ میں واقع ہے
علمی و تربیتی گروہ
الف۔ فقہ کا گروہ                 ب۔ اصول کا گروہ             ج۔ رجال اور داریہ الحدیث کا گروہ
تعلیمی کورسز
١۔ فقہ و اصول میں ایم فل (یعنی کارشناسی ارشد)   

 ٢۔ ڈاکٹریٹ(phd)       ۔
الف۔ اسلامی اصول فقہ  ب۔ اسلامی فقہ  ج۔ رجال اور داریۃ الحدیث
٣۔ سطح چہارم٤۔ سطح پنجم٥۔ تربیت مدرس  کا کورس
فقہ و اصول میں ایم فل
فقہ و اصول کے مضامین ایم فل کا محور مرکز حوزوی دروس یعنی(فقہ و اصول ) ہوتے ہیں کہ اس مدت میں طالب علم فقہی و اصولی اصطلاحوں سے مکمل طور پر واقف ہوجاتاہے۔
ایم فل کے دروس تین عنوانوں پر مشتمل ہوتے ہیں۔ جو طالب علم نے اس مدت میں پڑھنے ہوتے ہیں۔
 

 

یونٹس

عنوان درس

نمبر شمار

٧٨    

دروس حوزہ      

١

    ٢٤        

تخصصی دروس

٢

٤

   علم   بلاغت

٣

٤

مقالہ نویسی        

٤

110

جمع

 


دورس کا جدول
 

 

متن

یونٹس

عنوان درس

نمبر شمار

مکاسب محرمہ

۴۰

             فقہ ۱-۸      

۱

رسائل استصحاب  کفایہ جلد اول

۲۶

اصول ۱-۶

۲

 

۲

تفسیر موضوعی

۳

 

۲

تاریخ تحلیلی اسلام

۴

 

۶

عقائد ۵

۵

 

۲

روش تحقیق

۶

۷۸

جمع

 

         
 

دروس تخصصی    

 

متن

ضروری دروس

واحد

عنوان درس

نمبر شمار

 

 

۳

علم الرجال

۱

 

 

۱

دراية‌الحديث

۲

 

 

۲

القواعد الفقهيه

۳

 

 

۲

كليات علم حقوق

۴

 

 

۲

آيات الاحكام

۵

ادوار فقه و اصول

 

۲

ادوار اجتهاد

۶

 

فقه(5)واصول(6)

۲

اصول مقارن

۷

 

فقه(5)واصول(6)

۲

فقه الدوله

۸

 

فقه(5)واصول(6)

۲

فقه مقارن

۹

كفايه (ج2) امارت

اصول1 تا 6

۵

اصول (7 )

۱۰

كفايه (ج2)اصول عمليه

اصول (7)

۵

اصول (8)

۱۱

 

 

۴

پايان نامه

۱۲

 

 

۳۲

جمع

 

یہ تعلیمی کورس ۱۱۰ یونٹس پر مشتمل ہے۔

 

سطح چہارم فقہ و اصول

 فقہ و اصول کی چوتھی سطح میں تعلیمی و تحقیقی کورس پڑھا جاتاہے ۔ تا کہ طالب علم کو فقہ و اصول پر مکمل عبورحاصل ہوسکے اور درس خارج میں آنے سے پہلے مقدمات کو تحقیقی اور تحریری صورت میں علمی طورپر تحلیل کرسکے۔

یہ دورہ دو مراحل پر مشتمل ہے۔

١۔ چہار سالہ تعلیمی سلیبس

  اس میں طالبعلم کا تعلیمی وظیفہ تین محوروں پر مشتمل ہوتاہے ۔

محور اول حوزہ میں رائج درس خارج فقہ و اصول میں شرکت
محوردوم درس خارج کےاساتید  راہنماکے دورس میں شرکت   ہےتا کہ  دروس میں رہ جانے والی کمزوری  درس خارج میں جانے سے پہلے پوری ہوجائے تا کہ اسمیں خصوصی طور پر اساتید کی راہنمایی سے فایدہ اٹھایا جائے۔ اس میں ایک استاد راہنما اصول اور ایک استاد راہنما فقہ کا ہوتاہے۔ اور پورے ہفتہ میں ٥ طالبعلموں کا ایک جلسہ یا درس ہوتاہے۔

طالبعلموں کی بہتر ترقی اور شکوفائی کیلئے اس میں استاد  اور شاگرد کے وظائف کو مندرجہ ذیل طریقوں سے معین کیا جاتا ہے
سالانہ تعلیمی اہداف

اگرچہ تمام طلباء اپنے تعلیمی اہداف سےآگاہ ہوتے ہیں لیکن بہتر استفادہ کیلئے انہیں منصوبہ بندی کی ضرورت ہوتی ہے ۔ اسی وجہ سے ہر سال تعلیمی اہداف کو معین کیا جاتا ہے  اور اسی بناپر ان کی محنت جو اساتید محترم کی نگاہ میں ہوتی ہے ، معین و مشخص کی جاتی ہے۔
طلاب کے وظائف

سال اول

۱:اصولاورفقہ میں علماء اور ان کے طریقہ کار سے اجمالی آگاہی۔

۲:درس خارج میں شرکت اور مطالعہ،مباحثہ کے طریقہ کار سے آشنائی۔

۳:درس خارج اور استنباط کی ضروریات اور لوازمسے آشنائی۔

۴:اصولي، فقهي، تفسيري، حديثي، رجالي،لغوي و..منابع سے اجمالیآشنائی۔

۵:استاد کے درس کو مستند کرنا اور منابع کی طرف ارجاع دینا۔

۶:استاد کی طرف سے دلیل کے طور پر لائے گئے قواعد اور اصول سے آشنائی۔

۷:زبانی طور پر استاد کے درس کی وضاحت اور تشریح۔

۸:حاشیہ نگاری کے فن سے آگاہی

سال دوم

۱:مختلف علما کے اقوال کی تحقیق اور ان کے منشا اقوال سے آشنائی۔

۲:اسناد روایات اور علم رجال کی ابحاث کا اجمالی تعارف۔

۳:تحقیق و تنظیم(تحليل، تنظيم و دسته بندي، جمع بندي و نتيجه گيري)۔

۴:منابع قديمي و كتب قدماء کی طرف رجوع اور پرانے متون کا سمجھنا۔

۵:عربی میں تقریرات کا لکھنا اگرچہ ابتدائی طور پر ہی کیوں نہ ہو۔

سال سوم

۱: اقوال کا تجزیہ و تحلیل اور انکی تحقیق کرنا۔

۲: اسناد و روایات اور رجال کے حالات کا تفصیلی تعارف۔

۳:فقہ مقارن سے آگاہی۔

۴:قدرت تحقيقو بررسی میں اضافہ۔

۵:عربی میں تحقیق و تقریر لکھنے  میں مہارت کا حصول

سال چهارم

۱:بعض اہم متون و منابع جیسے شہید صدر کی تقریرات یا اصول و متون مناسب جو فقہ میں استعمال ہوتے ہیں سے تفصیلی آگاہی ۔

۲: علماء کے اقوال کے تجزیہ اور تحلیل کی قدرت میں اضافہ۔

۳:استنباط،اظہار نظر اور رائے کے انتخاب کا ملکہ حاصل کرنا۔

۴:اجتہاد کے جدید قواعد اور اصول کی بنیاد پر تحقیق و بررسی کرنا۔

۵:جدید اور مبتلا بہ مباحث کی تحقیق اوررسالے کیلئے موضوع کا انتخاب کرنا۔
وظائف اساتید

سال اول

۱:علماء اور ان کے اصولی اور فقہی مبانی کا اجمالی بیان

۲: مطلوبہ علمی روش کے طریقہ کا بیان اور کلاس ، مطالعہ اور مباحثہ میں حضور کے طریقے۔

۳:درس خارج اور استنباط کے لوازم اورتقاضوں  کی وضاحت۔

۴:اصولي، فقهي، تفسيري، حديثي، رجالي، لغوي و..منابع کا اجمالی تعارف

۵:تقریر لکھنے اور اس پر تسلط کے طریقے کا بیان

سال دوم

۱:روایات کی اسناد کی تحقیق اور علم رجال کی ابحاث  میں سوالات کا مطرح کرنا۔

۲:تحقیق کے موضوع اور راہنمائی کا خود طالب علم کے سپرد کرنا اور انجام دی گئی تحقیقات  بررسی کرنا۔

۳:پرانی کتابوں اور منابع سے سوالات کا مطرح کرنا۔

۴:عربی میں تقریرات لکھنے کی طرف رغبت دلانا اور اس کی بررسی کرنا

سال سوم
۱۔ ادلہ اقولا اور استنباط کی کیفیت اور جمع بندی اقوال سے سوال  
۲۔ اسناد روایات اور احوال رجال کی تفضیلی تحقیق و بررسی
۳۔ اقوال مقارن(سنی و شیعہ) و مباحث فقہی کا نقد و بررسی
۴۔ عربی زبان میں لکھے گئے مقالہ کی تدوین کو (طالب علم کے حوالے کرنا) لکھے گئے مقالہ کی محتوا اور شکل کی تحقیق کرنا۔
  سال چہارم:
۱۔ طالب محترم کے توسط سے عمیق ابحاث جو مباحث دروس سے مرتبط ہوں انکے محتوا کی تحقیق کروانا
۲۔ دائرۃ المعارف مجلات و مقالات سے جدید مباحث مطرح کرنا۔
۳۔ اسلامی معاشرہ کی ضرورت کے مطابق انتخاب موضوع میں طلاب کی مدد اور راہنمایی کرنا
محور سوم

 تیسرا محور، طالبعلم دروس اصلی اور تکمیلی کوپڑھے
محور دروس

 

 

یونٹس      

عنوان درس

نمبر شمار        

64

دروس اصلي

1

32

دروس تكميلي

2

6

رسالة علمي

3

102

جمع

 

دروس کا جدول      

 

یونٹس

عنوان درس

 نمبر شمار

48

درس خارج فقه و اصول

1

۱۶

مشاوره و راهنمايي درس خارج فقه و اصول

۲

64

جمع

 

دورس تکمیلی

 

 

یونٹس

عنوان درس

نمبر شمار

۲

شيوة‌ بررسي آراء و نقد اجتهادي

۱

2

كاربرد قواعد فقهي

2

۴

كاربرد قواعد اصولي

۳

۲

مسايل اصولي جديد

۴

۲

فلسفه فقه

۵

۴

مكاتب و مناهج اجتهاد(مكاتب عامه)

۶

۲

مكاتب و مناهج اجتهاد(مكاتب خاصه)

۷

۶

آيات الاحكام مقـارن

۸

۶

رجـال تحقيقي

۹

۲

روش‏شناسي درس خارج

۱۰

32

جمع

 



٢۔ ایک سالہ تعلیمی ٹائم ٹیبل ۔

 اس مد ت میں طالبعلم کیلئے ضروری ہے کہ وہ رسالہ علمی یا مقالہ اصولی یا فقہی موضوعات میں سے جو اس کے ساتھ مربوط ہے  لکھے۔ اس کورس کے یونٹس کی تعداد ۱۰۲ ہے۔
P .H .Dکا کورس: یہ کورس علمی کارکردگی اور تحقیات کا مجموعہ ہے۔
اس کورس میں افراد کی تربیت کا جاتی ہے کہ وہ مختلف موضوعات پر جدید اور معاشرہ کی ضرورت کو کرنے کیلئے اور اپنےملک کی ضرورت کے پیش نظر کام کریں اور ایسے علم کو موثر افزائش دیں ۔
P.H.Dکے کورس کے عنوان اصول فقہ اسلامی   فقہ اسلامی، رجال و درایۃ الحدیث(جن پر بھی کام ہورہاہے)
١٠۔ اصول فقہ اسلامی میں ڈاکٹریٹ:
اس دورہ مین اعلی درجے کے اساتید کی تربیت اور محققین و صاحب نظرات کی اعلی درجے پر تربیت کیجاتی ہے کہ وہ اصول فقہ اسلامی میں استنباط اور نظریہ کو بیان کرسکیں۔
محورہای دورس

 

 

یونٹس

عنوان درس

نمبر شمار

۴۲

دروس حوزوي

۱

۱۸

دروس تخصصي

۲

۱۸

رسالة علمي

۳

78

جمع

 



دروس کا جدول(دروس حوزوی)
 

 

متن

عنوان درس

یونٹس

نمبر شمار

تحقیقات

اصول (1)-(6)

24

۱

تحقیقات

مكاتب و مناهج اجتهاد

2

۲

تحقیقات

القواعد الفقهيه(1)-(2)

4

۳

تحقیقات

آيات الاحكام مقارن

2

۴

تحقیقات

فقه (1)-(5)

10

۵

 

42

 جمع

 

        

 

 

 

دروس تخصصی

 

 

متن

عنوان درس

یونٹس

نمبر شمار

تحقیقات

فلسفه فقه

2

۱

تحقیقات

جايگاه عقل و عرف در استنباط

2

۲

تحقیقات

ملاك احكام و نقش زمان و مكان در اجتهاد

2

۳

تحقیقات

مباني و روش استنباط از قرآن

2

۴

تحقیقات

مباحث جديد اصولي (1)-(2)

4

۵

تحقیقات

تاريخ تطور مسايل اصولي

2

۶

تحقیقات

كاربرد قواعد اصولي و فقهي در استنباط(1)-(2)

4

۷

تحقیقات

رسالة علمي

18

۸

 

36

 جمع

 

      اس کورس کے یونٹس کی کل تعداد     ٧٨       
۲۔ فقہ اسلامی میں ڈاکٹریٹ:

 اس دورہ کا مقصد اعلی درجے کے اساتید کی تربیت اسی طرح محققین اور صاحب نظران اور محققان کی علمی سطح کی ترقی و استنباط کا طریقہ اور نظریہ بیان کرنے کیلئے تربیت کیجاتی ہے
محور دورس

 

رديف

عنوان درس

نمبر شمار

۴۲

دروس حوزوي

1

۱۸

دروس تخصصي

2

۱۸

رسالة علمي

3

78

جمع

 

جدول دورس   

      دروس تخصی

 

 

رديف

عنوان درس

یونٹس

ضروری دروس

نمبر شمار

تحقیقات

فلسفه فقه

2

 

1

تحقیقات

مباحث جديد اصولي

2

 

2

تحقیقات

فقه مسايل مستحدثه

2

مكاتب و مناهج اجتهاد، قواعد فقهي، مباحث جديد اصولي و فلسفه فقه

3

تحقیقات

رجال

2

 

4

تحقیقات

فقه العقود(1)-(2)

4

 

5

تحقیقات

فقه القضاء(1)-(2)

4

 

6

علاقہ کی ضرورت کے مطابق

فقه مسايل مبتلابه

2

مكاتب و مناهج اجتهاد، قواعد فقهي، مباحث جديد اصولي و فلسفه فقه

7

علاقہ کی ضرورت کے مطابق

رسالة علمي

18

 

8

 

36

 

 جمع

 


                  
 


 

 

  • دروس حوزوي

 

متن

عنوان درس

واحد

نمبر شمار

تحقیقات

اصول (1)- (6)

24

1

تحقیقات

مكاتب و مناهج اجتهاد

2

2

تحقیقات

القواعد الفقهيه(1)- (2)

4

3

تحقیقات

آيات الاحكام مقارن

2

4

تحقیقات

فقه (1)- (5)

10

5

جمع

42

 

 

اس کورس کے کل یونٹس کی تعداد:۷۸

 

 

 

 

بازديد کنندگان اين صفحه: 125 بازديدکنندگان امروز: 68 کل بازديدکنندگان: 33317 زمان بارگذاری صفحه: 1/1250
جملہ حقوق سائٹ مجتمع کیلئے محفوظ ہیں.