تلاش
دقیق تر تلاش
English | فارسی | Urdu | Az | العربی
صفحه اصلي > اخبار 


  چاپ        ارسال به دوست

ترکی کے کردوں کا اپنے بچوں کے ناموں کا امام خمیںی،مطھری اور بھشتی رکھنا

ترکی کے کردوں میں جب بھی امام راحل کا نام لیا جائے یہ لوگ امام کے لئے ایک خاص احترام کے قائل ہیں اور امام کی رائے کے مقابلے میں اپنی رائَ کا اظھار نہیں کرتے اور ان لوگوں کی امام سے محبت اس قدر زیادہ ہے کہ وہ اس محبت کی وجہ سے اپنے بچوں کے نام امام خمینی ،مطھری اور بھشتی رکھتے ہیں۔ فقہ کے اعلی تعلیمی ادارے کی نیوز ایجنسی کی رپورٹ کے مطابق حجۃ الاسلام علی رضا یشیل کایا نے بین الاقوامی روابط کے ادارے کی طرف سے دفاع مقدس اور اسکی بقا کے اسرار کے نام سے منعقد کئے جانے والے ایک پروگرام میں کہا: جب میں ترکی میں ہوتا ہوں تو میرے لئے سب سے بڑا چیلنج مغربی ثقافت اور اسکی اسلامی ثقافت پر یلغار سے مقابلہ ہوتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس بات پر خدا کا شکر ادا کرتا ہوں کہ تاریخ اسلام میں مختلف تحریکوں کے بعد امام خمینی (ره) کے ذریعے سے ایران میں اسلامی انقلاب آیا کہ یہ انقلاب طالبعلموں میں اپنے ممالک میں فعالیت کے لئے امید کی کرن بن کر آیا اور انقلاب اسلامی کی برکت سے انہیں اپنے ممالک میں تبلیغ کا موقع ملا۔ انہوں نے کہا کہ امام خمینی (ره) ایک ایسی عظیم شخصیت ہیں کہ ترکی کے کردوں کے درمیان جب بھِ ان کا نام لیا جئَ وہ لوگ اس نام کے احترام میں اپنا سر خم کرتے ہیں اورانہیں امام سے اس حد تک محبت ہےکہ وہ اپنے بچوں کے نام امام خمینی (ره) ،مطھری اور بھشتی رکھتے ہیں ۔ ترکی کے اس طالب علم نے مزید کہا :کیوں کہ تمام طلاب امام خمینی (ره) اور مقام معظم رھبری کے پیروکار ہیں اس لئے انہیں اسلامی انقلاب کے ہیغام وحدت امت اسلامی اور تقریب مذاھب اسلامی کو اپنے ممالک کے لوگوں تک پہنچانا چاہیے۔ حجۃ الاسلام یشیل کایا نے مزید کہا: آجکل ترکی میں پائے جانے والے بعض مذھبی مسائل کی وجہ لوگوں کے درمیان مبانی اتحاد و وحدت کا مکمل اور صحیح طور پر بیان نہ ہونا ہے۔


١٣:٠٠ - 1392/07/21    /    شماره : ٣٩٢٤٥    /    تعداد نمایش : ٣٣٤


نظرات بینندگان
این خبر فاقد نظر می باشد
نظر شما
نام :
ایمیل : 
*نظرات :
متن تصویر:
 

خروج




بازديد کنندگان اين صفحه: 1428 بازديدکنندگان امروز: 3 کل بازديدکنندگان: 31405 زمان بارگذاری صفحه: 0/8281
جملہ حقوق سائٹ مجتمع کیلئے محفوظ ہیں.